Egyptian objectivity stabilizes ME

مصر کے علماء کا طریقہ کار قرآن اور برہان یعنی دلیل ہے لیکن فرقے صرف اپنے امام کو حرف آخر سمجھتے ہیں جس کی وجہ سے عربستان خون آلود ہوچکا اگر عام مسلمان کو مصری قرآنی طریقہ کار سمجھ آ جائے تو دجال سفیانی سب بے بس ہوجائیں گے سید سلیمان حسینی ندوی بھی دیوبندی مسلکیت کو چھوڑ کر قرآنی منھج اختیار کر چکے ہیں اللہ کرے تقی عثمانی اور طاہر القادری بھی مسلک چھوڑ کر امت کے ترجمان بن جائیں

發表迴響

在下方填入你的資料或按右方圖示以社群網站登入:

WordPress.com 標誌

您的留言將使用 WordPress.com 帳號。 登出 /  變更 )

Twitter picture

您的留言將使用 Twitter 帳號。 登出 /  變更 )

Facebook照片

您的留言將使用 Facebook 帳號。 登出 /  變更 )

連結到 %s